• جنوری 17, 2022

کسی خاتون کی جبری شادی غیر قانونی تصور ہوگی:امیر طالبان ملا ہیبت اللہ

کابل:طالبان کے امیر ملا ہیبت اللہ اخوندزادہ نے خواتین کے حقوق کو یقینی بنانے کے لیے خصوصی حکمنامہ جاری کردیا ہے۔

افغانستان کے نائب وزیر اطلاعات ذبیح اللہ مجاہد نے سماجی رابطے کی ویب سائٹ ٹوئٹر پر حکمنامہ جاری کیا جس میں افغان وزراء کو خواتین کے حقوق کا تحفظ یقینی بنانے کا حکم دیا گیا ہے۔

حکمنامہ کے مطابق کسی خاتون کی جبری شادی غیر قانونی تصور ہوگی جبکہ بیوہ کو خاوند کی وراثت میں اسلامی قوانین کے مطابق حق دیا جائے گا۔

منسٹری آف کلچر اینڈ انفارمیشن کو خواتین کے حقوق پر پمفلٹ چھپوانے کا حکم بھی دیا گیا ہے۔

0 Reviews

Write a Review

Read Previous

فاروق ستار کی (ن) لیگی قیادت سے ملاقات،سیاسی صورتحال پر تبادلہ خیال

Read Next

لبنان، عرب ممالک میں سفارتی تعلقات کی منسوخی کا باعث بننے والے وزیر اطلاعات مستعفی

Leave a Reply

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے