• اپریل 18, 2021

کتے کے کاٹنے پر اراکین اسمبلی کی معطلی کے حکم پر شیری رحمان برہم

پیپلزپارٹی کی سینئر رہنما شیری رحمان نے سندھ ہائی کورٹ سکھر بینچ کی جانب سے کتوں کے کاٹنے کے بڑھتے واقعات پر سندھ اسمبلی کے دو ارکان کو معطل کرنے کا حکم پر برہمی کا اظہار کیا ہے۔ 

شیری رحمان نے کہا کہ کتے کے کاٹنے کا تعلق اسمبلی ارکان سے جوڑنے پر افسوس ہوا، کتے کے کاٹنے کی وجہ سے فریال تالپور کی رکنیت منسوخ کرنے کا حکم قابل تشویش ہے۔

پیپلز پارٹی کی سینیٹر کا کہنا تھا کہ کیا وزیراعظم کے حلقے میں ایسے واقعات ہونے پر ان کو معطل کرنے کا حکم ہوگا؟

ان کا کہنا تھا کہ پارلیمان کے تقدس کا خیال کیاجائے، کوئی نہیں چاہتا حلقے میں ایسے واقعات ہوں، عدالت فریال تالپور کے خلاف فیصلے پر نظر ثانی کرے۔

خیال رہے کہ گزشتہ روز سندھ ہائی کورٹ سکھر بینچ نے کتوں کے کاٹنے کے بڑھتے واقعات پر سندھ اسمبلی کے دو ارکان کو معطل کرنے کا حکم دیا تھا۔

سندھ ہائی کورٹ سکھر بینچ نے کتوں کے کاٹنے کے متعلق تحریری فیصلے میں کہا تھا کہ منتخب نمائندے کتوں کے کاٹنے کے کیسز پر قابو پانے میں ناکام رہے۔

تحریری فیصلہ میں کہا گیا تھا کہ کتوں کے کاٹنے کی خبریں آئے روز دیکھنے کو ملتی ہیں۔ منتخب نمائندے اپنی ذمہ داری پر پورا نہیں اتر رہے۔ معطلی کے لیے صوبائی الیکشن کمشنر کو عدالتی فیصلے کی کاپی بھیجی جائے گی۔

عدالت نے تحریری فیصلے میں  کہا کہ ایم پی اے رتوڈیرو اور جامشورو کی رکنیت معطل  کی جائے اور الیکشن کمیشن دونوں ارکان اسمبلی کی رکنیت معطل کرنے کا حکم جاری کرے۔

خیال رہے کہ رواں برس فروری میں سندھ ہائی کورٹ سکھر بینچ نے کہا تھا کہ کسی شخص کو کتے کے کاٹنے پر متعلقہ افسران کے ساتھ علاقے کے ایم پی اے بھی ذمہ دار ہوگا، واقعہ کی صورت میں حلقہ کے ایم پی اے کے خلاف مقدمہ درج کرایا جاسکتا ہے۔

0 Reviews

Write a Review

Read Previous

ن لیگ نے 20 ہزار اور پی ٹی آئی نے 35 ہزار ارب روپے قرض واپس کیا، وزیر اعظم

Read Next

جنرل ندیم رضا کی عراقی وزیر دفاع چیف آف سٹاف اور فضائیہ کے سربراہ سے ملاقاتیں

Leave a Reply

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے