• جنوری 24, 2021

پیٹرولیم بحران کس کی غفلت کا نتیجہ؟ تحقیقاتی رپورٹ وزیراعظم کو ارسال

اسلام آباد: ملک میں پیٹرول بحران کے پیچھے کون سے عوامل کار فرما تھے؟ ایف آئی اے نے تحقیقاتی رپورٹ وزیراعظم کو پیش کردی ہے۔ ذرائع کے مطابق پیٹرول بحران کی تحقیقاتی رپورٹ تیار کرلی گئی ہے، ایف آئی اے کی جانب سے تیار کردہ تحقیقاتی رپورٹ وزیر اعظم کو پیش کردی گئی ہے، رپورٹ میں بحران کے ذمہ دار پیٹرولیم ڈویژن کےذیلی ادارے قرار دئیے گئے ہیں۔ ذرائع کا کہنا ہے کہ تحقیقات کے دوران نجی مارکیٹنگ کمپنیوں کےذخیرے کی جانچ پڑتال کی گئی، نجی آئل مارکیٹنگ کمپنیاں بحران کا سبب بنیں، جنہوں نے پیٹرول پمپس کو جان بوجھ کر سپلائی روکی، ان کمپنیوں نے پیٹرول کا وافر ذخیرہ ہونےکے باوجود مصنوعی بحران پیداکیا، جبکہ وزارت پیٹرولیم، ڈی جی آئل پیٹرول کی دستیابی یقینی بنانےمیں ناکام رہی۔ذرائع نے انکشاف کیا کہ پیٹرول بحران کے دوران کمپنیوں کے پاس ذخیرہ وافر مقدار میں موجود تھا مگر حکومتی اداروں نے کمپنیوں کےذخیرےکی جانچ تک نہ کی، کمیٹی نے ذمہ داران کے خلاف سخت کارروائی کی سفارش کردی ہے۔ دستاویزات کے مطابق پیٹرولیم ڈویژن کے ذیلی اداروں کےدرمیان رابطوں کا فقدان رہا، متعلقہ اداروں کے درمیان معلومات کےتبادلےکا کوئی میکنزم نہیں تحقیقاتی رپورٹ میں ایف آئی اے کی جانب سے وزارت پیٹرولیم سے پوچھے سوالات کےجوابات کو بھی رپورٹ کا حصہ بنایا گیا ہے، دستاویز کے مطابق وٹرنری ڈاکٹر شفیع آفریدی کو وزارت میں ڈی جی آئل لگایا گیا، شفیع آفریدی کے پاس آئل سیکٹر میں کام کاکوئی تجربہ نہیں تھا جبکہ شفیع آفریدی ریسرچ افسر عمران ابڑو کی توسیع کیلئےخلاف ضابطہ سفارش کرتے رہے۔

0 Reviews

Write a Review

Read Previous

نواز شریف غیر ملکی خواہشوں کی تکمیل چاہتے ہیں، شیخ رشید

Read Next

پی ڈی ایم جماعتیں جلسے کے بعد بری طرح ایکسپوز ہوگئیں: وزیراعظم

Leave a Reply

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے