• اپریل 11, 2021

پاکستان میں ایک اسی جگہ جسکو بد دعا نے الٹ کر رکھ دیا، یہ بستی پاکستان کے مشہور شہرسے ساڑھے تین گھنٹے کے فاصلے پر ہے

 

دنیا بھر میں بہت سی ایسے مقامات موجود ہیں جن کے بارے میں دلچسپ و عجیب واقعات مشہور ہیں اور یہی وجہ ہے کہ ان جگہوں کو لوگ پراسرار سمجھتے ہیں اور ایسے بہت سے مقامات پاکستان میں بھی موجود ہیں جو انتہائی دلچسپ اور پراسرار ہیں لیکن بہت ہی کم لوگ ہیں جو ان جگہوں کے بارے میں جانتے ہیں۔اگر بات کی جائے صوبہ سندھ کی تو یہاں موجود ایسی جگہوں کے بارے میں صرف مقامی لوگ ہی جانتے ہیں۔ آج آپکوفراہم کی جائے گی معلومات سندھ میں موجود ” اُلٹی بستی ” کے بارے میں جس کا آپ کو شاید ہی معلوم ہو۔یہ بستی کراچی سے ساڑھے تین گھنٹے دور ہے۔ لعل شہباز قلندر کے مزار سے چند میٹر فاصلے پر روڈ کی جانب مٹی کے ٹیلوں سے بنے چھوٹے چھوٹے پہاڑ ہیں مگر ان ٹیلوں کو اگر قریب سے دیکھا جائے تواندازہ ہوتا ہے کہ یہ” الٹی بستی ”یعنی سیہون کا قلعہ ہے، جس کو دیکھ کر یہ معلوم ہوتا ہے کہ یہاں عرصہ دراز قبل ایک جہاں آباد تھا،یا پھرکسی کا محل تھا جہاں چھوٹے چھوٹے کمروں کی شواہدبھی ملتے ہیں اور بڑے درباروں کے بھی۔الٹی بستی کے رہنے والوں کے مطابق تاریخ میں ایسا بتایا جاتا ہے کہ لعل شہباز قلندر کے خادم خاص بودلہ بہارکو اس بستی کے حاکم نے قتل کر دیا تھا جس کہ وجہ یہ تھی کہ حاکم بہت ظالم تھا اور وہ سب کو اپنا غلام سمجھتا تھا۔
حاکم شہباز قلندر کو پسند نہ کرتا تھا اور اس کا خادم ہر وقت لعل شہباز کے ساتھ رہتا تھا جس کی وجہ سے حاکم نے بودلہ بہادر کو قتل کردیا تھا۔ جس پر شہباز قلندر نے اس بستی کے حاکم کی حکومت کو بد دُعا تھی اور اس وجہ سے یہ بستی الٹ گئی تھی۔

Read Previous

A1TV Headlines 12 PM | 28 November 2020

Read Next

پاکستان اور چین ہر مشکل میں ایک دوسرے کے ساتھ کھڑے ہیں: آرمی چیف

Leave a Reply

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے