• اکتوبر 19, 2021

وزیراعلیٰ بلوچستان جام کمال کو مستعفی ہونے کیلئے کی مہلت دیدی گئی

کوئٹہ: بلوچستان میں صوبائی وزرا سمیت ناراض اراکین اسمبلی نے وزیراعلیٰ جام کمال کو مستعفی ہونے کے لیے بدھ کی شام تک کی مہلت دے دی۔

تفصیلات کے مطابق بلوچستان اسمبلی میں صوبائی وزرا سمیت ناراض اراکین اسمبلی نے مشترکہ پریس کانفرنس کی۔

ظہور بلیدی نے کہا کہ وزیراعلیٰ بلوچستان جام کمال پر بی اے پی (باپ پارٹی) کے 11 اور چند اتحادی اراکین نے عدم اعتماد کا اظہار کیا، جس کی وجہ صوبے میں بڑھتی ہوئی بے چینی ہے، ہم نے وزیراعلیٰ کو مستعفی ہونے کے لیے 2ہفتوں کا وقت دیا تھا، لیکن انہوں نے استعفیٰ دینے کی بجائے سوشل میڈیا پر ہمارے درمیان اختلافات کا تاثر دینے کی کوشش کی۔ ہمارے گروپ کے تمام لوگ پندرہ ہیں۔ وزیراعلی اپنی ضد ختم کرکے مزید وقت ضائع ناکریں اور استعفی دیدیں۔

انہوں نے کہا کہ ہم تحریک عدم اعتماد کی صورت میں اسمبلی جائیں اس سے بہتر ہے کہ وزیراعلیٰ خود ہی فوری استعفیٰ دیں۔

رکن اسمبلی نصیب اللہ مری کا کہنا تھا کہ وزیراعلیٰ استعفی دیں آئندہ وزیراعلیٰ بی اے پی سے ہی ہوگا۔

صوبائی وزیر اسد بلوچ نے کہا کہ وزیراعلیٰ اپنے اتحادیوں کے ساتھ وعدوں پر پورا نہیں اترے، ۔بلوچستان میں مسائل دن بدن بڑھ رہے ہیں ، وہ عہدے سے چمٹے رہنے پر بضد ہیں لیکن اراکین کا اعتماد انہیں حاصل نہیں رہا، جام کمال پر سب کا اعتماد ختم ہو گیا ہے ، ان کو بدھ کی شام تک کا وقت دیتے ہیں، کل تک استعفیٰ نہیں دیا تو تحریک عدم اعتماد سمیت دیگر آپشنز پر غور کریں گے۔

0 Reviews

Write a Review

Read Previous

بھارتی ریاست آسام میں تشدد کا معاملہ،مودی سرکار قصور وار قرار

Read Next

چنیوٹ:بہن سے مبینہ ناجائز تعلقات،بھائیوں نے ایک شخص کی آنکھیں نکال دیں

Leave a Reply

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے