• جنوری 20, 2022

مہنگائی، جھوٹ، کرپشن پر عمران نیازی کے خلاف چالان کٹ چکا: حمزہ شہباز

لاہور: حمزہ شہباز نے کہا ہے کہ مہنگائی، جھوٹ، کرپشن پر عمران نیازی کے خلاف چالان کٹ چکا، پی ٹی آئی نے نیا پاکستان بناتے بناتے پرانا پاکستان بھی تباہ کر دیا، حکومت سے جان چھڑانے کیلئے ہر فورم پر جدوجہد جاری رہے گی، آصف زرداری کو چاہیے کہ بہتر الفاظ کا چناؤ کریں۔

اپوزیشن لیڈر پنجاب اسمبلی و لیگی رہنما حمزہ شہباز نے لاہور میں میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ وزیراعظم کا بیان ہے سب سے کم مہنگائی پاکستان میں ہے، آج مہنگائی کی شرح 18 فیصد ہے، مشیر خزانہ کہتے ہیں مہنگائی ابھی اور بڑھنی ہے، اب ان کا احتساب ہوگا، عمران نیازی کو بھاگنے نہیں دیں گے۔

حمزہ شہباز کا کہنا تھا کہ گلی کوچوں میں عوام سے پوچھیں، کتنے لوگ بھوکے سوتے ہیں، جنہوں نے ان پر اعتبار کیا وہ خود کو کوستے ہیں، اس ظالم حکومت سے جان چھڑانے کیلئے جدوجہد کریں گے، ایک کروڑ نوکریوں اور 50 لاکھ گھروں کا جھانسہ دیا گیا، عمران نیازی اس ملک کے سب سے بڑے مافیا ہیں۔

دوسری جانب لیگی رہنما رانا ثناء اللہ کا کہنا ہے کہ نیب کی اصلیت لوگوں کو پتہ چل چکی ہے، وزیراعظم نے خود نئے ڈی جی نیب کی تقرری کی ہے، نیا ڈی جی نیب بھی وزیراعظم کے انتقام کے ایجنڈے کو پورا کرے گا۔ انہوں نے کہا کہ گزشتہ روز بجلی 5 روپے فی یونٹ مہنگی کر دی گئی، ڈالر 200 روپے تک پہنچے گا، ملک مہنگائی کی دلدل میں پھنس رہا ہے، حکومت کیخلاف ہم میدان میں موجود ہیں، یہ نالائق ٹولہ ملک کو تباہی کی جانب لے جا رہا ہے۔

ادھر انسداد منشیات کی خصوصی عدالت میں مسلم لیگ ن کے رہنما رانا ثنا اللہ کے خلاف منشیات برآمدگی کیس کی سماعت ہوئی۔ طبیعت ناساز ہونے کے باعث فاضل جج نے کیس کی سماعت اپنے چیمبر میں کی۔ رانا ثنا اللہ سمیت شریک ملزمان نے پیش ہو کر حاضری مکمل کروائی۔

پراسکیوشن نے کیس کی سماعت ملتوی کرنے کی درخواست دی، جس میں موقف اختیار کیا گیا کہ مصروفیت کی وجہ سے عدالت پیش نہیں ہو سکتے، عدالت کیس کی سماعت ملتوی کرے۔ عدالت نے پراسیکیوشن کی مصروفیت کے باعث سماعت 22 جنوری تک ملتوی کر دی۔

0 Reviews

Write a Review

Read Previous

منی لانڈرنگ مقدمہ: شہباز شریف، حمزہ شہباز اور دیگر کیخلاف چالان تیار

Read Next

کورونا کی چوتھی لہر مزید 11 جانیں لے گئی، 24 گھنٹے کے دوران 395 نئے مریض

Leave a Reply

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے