• مارچ 7, 2021

صدر پیوٹن 1.37 ارب ڈالر مالیتی محل کے مالک ہیں،روسی اپوزیشن لیڈر کا الزام

ماسکو:روس میں اپوزیشن لیڈر الیکسی نوالنی نے تحقیقاتی ویڈیو رپورٹ میں صدر پیوٹن پر الزام لگایا گیا ہے کہ وہ ایک اعشاریہ سینتیس ارب ڈالر مالیت کے محل کے مالک ہیں۔ صدارتی محل کے ترجمان نے الزامات کی سختی سے تردید کی ہے۔ رپورٹ میں دعویٰ کیا گیا کہ بحیرہ اسود کے ساحلی علاقے پر بنا محل صدر پیوٹن کو رشوت کے طور پر دیا گیا۔ نوالنی نے اسے تاریخ کی سب سے بڑی رشوت بھی قرار دیا ہے۔ محل میں ایک کسینو، آئس ہاکی کمپلیکس اور انگوروں کا باغ ہے۔ روس کے صدارتی محل کے ترجمان نے ان الزامات کی سختی سے تردید کی ہے، نوالنی جرمنی سے واپسی پر ماسکو میں گرفتار کر لیے گئے تھے۔

0 Reviews

Write a Review

Read Previous

رواں سال بغیر امتحان بچوں کو پروموٹ نہیں کیا جائے گا،سعید غنی

Read Next

جوبائیڈن نے کوویڈ ایکشن پلان کا اعلان کردیا

Leave a Reply

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے