• مئی 24, 2022

صاف پانی کمپنی میں کسی رولزکی لاقانونیت نہیں پائی گئی،تحریری فیصلہ جاری

لاہورکی احتساب عدالت نے صاف پانی کمپنی ریفرنس کا تحریری فیصلہ جاری کردیا ہے۔احتساب عدالت کے جج محمد ساجد علی نے 23 صفحات پر مشتمل تحریری فیصلہ جاری کیا۔

فیصلے میں کہا گیا کہ صاف پانی کمپنی میں کسی رولز کی لاقانونیت نہیں پائی گئی اور سروے کی ایسسمںٹ سے لےکر پروجیکٹ مکمل ہونے تک تمام متعلقہ رولز اور قوانین پر مکمل عملدرآمد کیا گیا۔

پروجیکٹ میں جو بھی تبدیلی کی گئی وہ متعلقہ کمیٹی کی سفارشات اور منظوری سے کی گئی اور پراسکیوشن کے مطابق حکومتی خزانے کو نقصان پہنچایا گیا۔

فیصلے میں بتایا گیا کہ ملزمان کے درمیان کوئی مالیاتی فائدہ لینے کا  کوئی خاص الزام نہیں ہے۔ شہباز شریف کے داماد علی عمران اور بیٹی رابعہ عمران کی ملکیتی پلازے کا ایک فلور کرایے پر صاف پانی کمپنی کو دیا گیا۔

پراسکیوشن کا الزام ہے کہ فلور کا کبھی قبضہ نہیں لیا گیا اور ایڈونس کرایہ دیا گیا، حقائق کےمطابق صاف پانی کمپنی نے نہ صرف باقاعدہ قبضہ لیا بلکہ نئی انتظامیہ نے کچھ تبدیلیوں کے ساتھ ساتھ معاہدہ برقرار رکھا۔

احتساب عدالت نے فیصلے میں کہا ہے کہ وسیم اجمل سمیت دیگرملزمان نے نہ ہی اختیارات کا ناجائز استعمال کیا اور نہ ہی کوئی ناجائز فائدہ اٹھایا۔

ریکارڈ کےمطابق صاف پانی کمپنی ریفرنس نیب کے جرائم میں نہیں آتا اورنیب کےموجودہ جرم میں ملزمان کوسزا ہونے کے امکانات نہیں ہیں۔

فیصلےمیں یہ بھی کہا گیا کہ نامزد ملزمان نے بریت کی درخواستیں نیب ترمیمی آرڈیننس کی روشنی میں دائر کیں اورنیب پراسکیوٹر کے مطابق نیب ترمیمی آرڈیننس زیر سماعت مقدمات پر اثر انداز نہیں ہوسکتا۔

دوسرے نیب ترمیمی آرڈیننس کی سیکشن چار کے تحت زیر التوا کیسز اس کے دائر اختیار میں آتے ہیں،اس لئے عدالت ملزمان کی بریت کی درخواستوں کو منظور کرتی ہے۔

اس کیس کے ملزمان میں قمر اسلام راجہ،وسیم اجمل ،خالد ندیم ،ظہور احمد سمیت 16 افراد شامل ہیں تاہم عدالت شہباز شریف کی بیٹی اور داماد سمیت دیگر دو ملزمان کو اشتہاری قرار دینے کا فیصلہ برقرار رکھتی ہے

0 Reviews

Write a Review

Read Previous

لاہور:جناح اسپتال میں پیرا میڈیکل اسٹاف کااحتجاج،او پی ڈی بند

Read Next

وزیراعظم کا حل شدہ 15 لاکھ شکایات میں سے 2 لاکھ 38 ہزار کو دوبارہ کھولنے کا حکم

Leave a Reply

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے