• ستمبر 23, 2021

جنوبی پنجاب میں کپاس کی فصل پر بیماریوں کا حملہ معاشی حد سے تجاوز، کاشتکار پریشان

ملتان: ملتان سمیت جنوبی پنجاب میں زرعی ادویات کے استعمال کے باوجود بھی کپاس کی فصل پر مختلف بیماریوں کا حملہ معاشی حد سے تجاوز کر گیا ہے جس سے کاشتکار بھی محکمہ زراعت کی جانب سے مناسب رہنمائی نہ ملنے پر پریشان ہیں۔

ملتان سمیت پنجاب بھر میں رواں سال 47 لاکھ ایکڑ رقبے پر کپاس کاشت کی گئی تاہم مارکیٹ میں جعلی اسپرے اور کھاد کی فروخت نے کاشتکاروں کی معاشی مشکلات میں اضافہ کر دیا ہے، یہی وجہ ہے کہ بار بار اسپرے کرنے کے باوجود بھی کپاس کی فصل پر سفید مکھی، تھرپس اور وائرس سمیت مختلف بیماریوں کا حملہ معاشی حد سے تجاوز کر گیا ہے۔

محکمہ زراعت کے اعلی حکام کا کہنا ہے کہ جعلی کھاد اور زرعی ادویات کی فروخت کرنے والوں کے خلاف ادارے کام کر رہے ہیں جن کو جلد ہی قانون کی گرفت میں لایا جائے گا۔

کسانوں کا کہنا ہے کہ کپاس کی پیداواری لاگت میں مسلسل اضافہ ہو رہا ہے جس کی وجہ سے حکومت بھی کپاس کی کم سے کم امدادی قیمت 6 ہزار روپے مقرر کرے تاکہ ان کے اخراجات پورے ہو سکیں۔

0 Reviews

Write a Review

Read Previous

سندھ: آل پاکستان پرائیویٹ اسکولز ایسوسی ایشن کا بچوں کو آؤٹ ڈور تعلیم دینے کا اعلان

Read Next

سندھ حکومت کا موٹرسائیکل پر سائیڈ گلاس لگانا لازمی قرار دینے کا فیصلہ

Leave a Reply

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے