• مئی 25, 2022

جراثیم کش، کھانے اور گھل جانیوالا پلاسٹک تیار

ساوپالو: (روزنامہ دنیا) اس وقت پلاسٹک پوری دنیا کیلئے ایک خوفناک مسئلہ بنا ہوا ہے، اس تناظر میں برازیلی سائنس دانوں نے بیکٹیریا کش، ازخود تلف ہونے بلکہ کھانے کے قابل پلاسٹک تیار کیا ہے۔

میڈیا رپورٹ کے مطابق برازیل کی ساوپالو یونیورسٹی سے وابستہ پروفیسر مارسیا ریگینا ڈی مورا نے حیاتیاتی پالیمر سے یہ سبز پلاسٹک بنایا ہے جسے بائیو پلاسٹک بھی کہا جاتاہے۔ یہ بے رنگ، بے بو اور بے ذائقہ پاوڈر کی شکل میں بھی ملتا ہے لیکن اس میں مضبوطی اور لچک ویسی نہیں ہوتی جیسی روایتی پٹرولیم پلاسٹ میں ملتی ہے۔

ڈاکٹر مارسیا پرامید ہیں کہ یہ کم خرچ اور ماحول دوست پلاسٹک کم از کم تھیلیوں اور پیکنگ میں استعمال ہو سکتا ہے۔ اس طرح یہ روایتی پلاسٹک کے مقابلے بہت موثر ثابت ہو سکتا ہے۔ اسی تحقیقی گروہ نے کچھ تبدیلی کے بعد کھایا جانیوالا پلاسٹک بھی تیار کیا ہے اس کے علاوہ بیکٹیریا دور رکھنے والی زخم پٹیاں بھی تیار کی ہیں۔

Read Previous

پاکستان میں پابندیوں کی وجہ سے بولڈ سین نہیں کرسکتے، صبا قمر

Read Next

ایم کیو ایم پاکستان کا حکومت پر بھروسہ کرنے سے انکار

Leave a Reply

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے