• دسمبر 6, 2021

ایتھوپیا: تیگرے کے باغی جنگجو دارالحکومت سے صرف پچیس کلومیٹر دور

ادیس ابابا: ایتھوپیا میں تیگرے کے باغی جنگجو دارالحکومت ادیس ابابا سے صرف پچیس کلومیٹر کی دوری پر پہنچ گئے۔ باغی جنگجوؤں کا دعویٰ ہے کہ سرکاری فورسز ہتھیار ڈال کر ان کے ساتھ مل رہی ہیں، حکومت نے ملک بھر میں چھ ماہ کے لیے ایمرجنسی نافذ کر دی۔

تیگرے کے باغی جنگجو ایتھوپئین دارالحکومت کے دروازے پر، باغیوں نے دارالحکومت سے صرف 25 کلومیٹر دور ہونے کا دعویٰ کردیا۔ تیگرے کے باغی جنگجوؤں کا کہنا ہے کہ گزشتہ چوبیس گھنٹے میں 1165 سرکاری اہلکاروں نے ہتھیار ڈال دیئے جن میں سے 400 اہلکار باغیوں کے ساتھ مل گئے ہیں جبکہ غیر ملکی میڈیا کی رپورٹ کے مطابق دارالحکومت ادیس ابابا کے اطراف میں باغیوں کی کوئی سرگرمی نظر نہیں آرہی۔

ایتھوپئین پارلیمنٹ نے اگلے چھ ماہ کے لیے ایمرجنسی کے نفاذ کی منظوری دے دی، ایمرجنسی کے دوران وزیر اعظم کو غیر معمولی اختیارات حاصل ہونگے۔ 18 برس سے زائد عمر کے شہریوں کو زبردستی فوج میں بھرتی کیا جاسکتا ہے۔

امریکا نے ایتھوپیا سے اپنے شہریوں کو واپس بلا لیا، جبکہ دیگر ملکوں کے سفارتکار اور شہری بھی بڑی تعداد میں ادیس ابابا چھوڑ رہے ہیں۔

0 Reviews

Write a Review

Read Previous

ملک بھر میں ڈینگی کے وار، پنجاب میں مجموعی اموات کی تعداد 59 ہوگئی

Read Next

وزیراعظم نے جدید سہولتوں سے لیس زچہ بچہ اسپتال کا سنگ بنیاد رکھ دیا

Leave a Reply

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے