• اکتوبر 30, 2020

امریکی وزیر خارجہ اور طالبان رہنما ملا برادر کے مابین قیدیوں کی رہائی پر تبادلہ خیال

قطر، قطر میں طالبان کے سیاسی دفتر کے سربراہ ملا برادر نے امریکی وزیر خارجہ مائیک پومپیو کے ساتھ ویڈیو کانفرنس کے ذریعے بات چیت کی جس میں قیدیوں کی رہائی پر تبادلہ خیال کیا گیا۔

طالبان کا کہنا ہے کہ دونوں رہنماؤں نے افغان امن سے متعلق گفتگو کی۔ طالبان ترجمان سہیل شاہین نے ٹویٹر اکاؤنٹ پر لکھا کہ دونوں فریقوں نے امارت اسلامیہ کے باقی قیدیوں کی رہائی کو مذاکرات کے آغاز کے لیے اہم سمجھا۔ امریکی وزیر خارجہ نے بھی عید الاضحی کے موقع پر امارت اسلامیہ کے اعلان کردہ جنگ بندی کا خیرمقدم کیا۔

افغان حکومت اور طالبان کے مابین عیدالاضحی کے موقع پر ایک دوسرے کے خلاف مسلح کاررائیاں نہ کرنے پر اتفاق کیا گیا تھا اس کے باوجود ننگرہار میں مسلح تصادم میں 29 افراد ہلاک ہو گئے۔ طالبان نے اس مسلح تصادم میں ملوث ہونے کی تردید کی جبکہ افغان حکام نے اس کو داعش کی کارروائی قرار دیا ہے۔

افغان حکومت اور طالبان کے مابین 3 روزہ جنگ بندی اتوار کو ختم ہو گئی تھی لیکن کابل کو امید تھی کہ اس میں توسیع ہو سکتی ہے۔ یاد رہے کہ جمعرات کی رات میں افغانستان کے مشرقی صوبے لوگر میں بھی خودکش حملہ ہوا تھا، طالبان نے اس میں بھی ملوث ہونے کی تردید کی تھی۔

0 Reviews

Write a Review

Read Previous

کشمیر کا مسئلہ قراردادوں اور 2 منٹ کی خاموشی سے حل نہیں ہوگا: سراج الحق

Read Next

بھارت نے بچوں سمیت ہزاروں کشمیری بغیر مقدمات جیلوں میں بند کر رکھے ہیں، ہیومن رائٹس واچ

Leave a Reply

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے