• ستمبر 23, 2021

امریکا کے جلد بازی میں انخلاء سے سکیورٹی کی بدترین صورتحال ہے: اشرف غنی

کابل:  افغان صدر اشرف غنی نے ملک میں طالبان کی طرف سے بڑھتے ہوئے کنٹرول کی ذمہ داری امریکا پرڈال دی اور الزام لگاتے ہوئے کہا کہ جلدبازی میں انخلا کے نتیجے میں سکیورٹی کی بدترین صورتحال ہے۔

افغان پارلیمنٹ سے خطاب کے دوران افغان صدر نے کہا کہ جو موجودہ صورتحال ہے اس کی ایک ہی وجہ ہے کہ امریکا نے جلدبازی میں افغانستان سے انخلا کیا۔امریکی مکمل انخلا کے سنگین نتائج ہوں گے۔

دوسری جانب افغان آرمی نے بتایا کہ جنوبی اور مغربی حصے کے تین صوبوں میں سیکیورٹی کی صورتحال ’انتہائی نازک‘ ہے جہاں طالبان اور افغان فورسز کے مابین جھڑپیں تیز ہوچکی ہیں۔

گزشتہ روز بھی افغان صدر اشرف غنی نے ڈیجیٹل کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے کہا تھا کہ طالبان افغان امن عمل سے متعلق جھوٹ بول رہے ہیں وہ افغانستان میں سیکیورٹی کی صورتحال تبدیل نہ ہونے تک امن عمل میں شامل نہیں ہوں گے۔ افغانستان میں سیکیورٹی کی صورتحال اگلے چھ ماہ میں تبدیل ہوجائے گی اور افغان شہروں کی سلامتی ان کی ترجیح ہے۔

ان کا کہنا تھا کہ طالبان تبدیل نہیں ہوئے، وہ امن نہیں چاہتے یا تو ملک کی ترقی نہیں چاہتے اور طالبان نے باغی گروپوں کو ملک میں داخل ہونے کی اجازت دی۔ طالبان ہمارے لیے ماضی جیسا مستقبل بنانا چاہتے ہیں۔

0 Reviews

Write a Review

Read Previous

فلسطین اور کشمیر کے مسئلوں کا پرامن حل چاہتے ہیں، وزیر خارجہ

Read Next

کراچی: سندھ رینجرز، پولیس کی مشترکہ کارروائی، 2 منشیات فروش گرفتار

Leave a Reply

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے