• جولائی 28, 2021

افغان حکومت کا 10 رکنی وفد طالبان سے مذاکرات کیلئے دوحہ پہنچ گیا

کابل: افغان حکومت کا 10 رکنی وفد طالبان سے مذاکرات کے لیے دوحہ پہنچ گیا، کابل ائیرپورٹ پر سابق صدر حامد کرزئی نے وفد کو رخصت کیا۔ اُدھر افغان صوبے کاپیسا کے ڈپٹی گورنر طالبان کے ساتھ لڑائی میں مارے گئے۔

افغانستان میں لڑائی، امن کی کوششیں ایک ساتھ جاری ہیں، افغان حکومت کا 10 رکنی وفد طالبان سے مذاکرات کے لیے دوحہ پہنچ گیا، وفد میں عبد اللہ عبد اللہ، محمد کریم خلیلی، عطا نور محمد، معصوم استانکزئی شامل ہیں۔

کابل ائیرپورٹ پر وفد کو رخصت کرتے ہوئے سابق صدر حامد کرزئی کا کہنا تھا کہ وفد کو طالبان سے مذاکرات کے لیے فیصلہ کن اختیارات دیے گئے ہیں۔

وفد کے سربراہ عبد اللہ عبداللہ نے کہا کہ وفد پورے افغانستان کی نمائندگی کرتا ہےاور انہیں مستقل امن کا موقع نظر آرہا ہے۔

افغان صوبے کاپیسا میں طالبان اور افغان فورسز کی شدید لڑائی جاری ہے، صوبے کے ڈپٹی گورنرعزیز الرحمان لڑائی کے دوران جاں بحق ہوگئے۔

افغان میڈیا کے مطابق طالبان نے کاپیسا کے دو اضلاع پر قبضہ کر لیا ہے۔

قندھار میں بھی سپن بولدک اور دیگر علاقوں کا کنٹرول دوبارہ حاصل کرنے کے لیے افغان فورسز ایڑی چوٹی کا زور لگا رہی ہیں۔

0 Reviews

Write a Review

Read Previous

روس کا لاپتہ ہونیوالا طیارہ سائبیریا سے مل گیا

Read Next

ٹی ٹونٹی ورلڈ کپ 2021، پاکستان اور بھارت گروپ سٹیج پر مدمقابل ہوں گے

Leave a Reply

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے