• اکتوبر 27, 2020

اسلام آباد ہائیکورٹ نے چیئرمین نیپرا کی تعیناتی کا ریکارڈ طلب کر لیا

اسلام آباد ہائی کورٹ چیئرمین نیشل الیکٹر ک ریگولیٹری اتھارٹی (نیپرا) کی تعیناتی کا ریکارڈ طلب کر لیا۔

اسلام آباد ہائی کورٹ نے جسٹس محسن اختر کیانی نے چیئرمین نیپرا کے خلاف دائر درخواست پر دو صفحات پر مشتمل تحریری حکم نامہ جاری کر دیا۔

عدالت نے سیکرٹری کابینہ، چیریمین نیپرا توصیف ایچ فاروقی کو پری ایڈمیشن نوٹس جاری کرتے ہوئے چیر مین نیپرا کی تعیناتی کا ریکارڈ طلب کر لیا ہے۔

اسلام آباد ہائی کورٹ نے اپنے حکم نامے میں کہا ہے کہ چیئرمین نیپرا کی تعیناتی کا ریکارڈ جواب کے ساتھ جمع کرایا جائے۔

عدالت نے کیس 29 ستمبر کو دوبارہ سماعت کیلئے مقرر کر دیا ہے۔

خیال رہے کہ طارق زمان چوہدری نے چیئرمین نیپرا توصیف ایچ فاروقی کی تعیناتی کو عدالت میں چیلنج کر رکھا ہے۔

درخواست گزار وکیل طارق زمان چوہدری کا کہنا ہے کہ چیرکمین نیپرا کی تعیناتی میں قانون کی خلاف ورزی کی گئی، چیرنمین نیپرا کی تعیناتی میں مروجہ طریقہ کار کو نہیں اپنایا گیا۔

طارق زمان چوہدری کا کہنا ہے کہ چیر مین نیپرا کی تعیناتی کے لیے بلائے گیے سلیکشن کمیٹی کے اجلاس کی کارروائی کو کبھی پبلک نہیں کیا گیا، تعیناتی کے بعد سے چیر مین نیپرا خود کو مراعات دے رہے ہیں جو غیرقانونی ہے۔

0 Reviews

Write a Review

Read Previous

سندھ پولیس کے کورونا سے متاثرہ اہلکاروں کی تعداد 2500 سے تجاوز کرگئی

Read Next

بھارتی ارب پتی مکیش امبانی کو 2.5 ارب ڈالر کا نقصان

Leave a Reply

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے